امریکی نگران طیارے کا راستہ روکنا قانونی اور ضروری تھا، چین

بیجنگ جدت ویب ڈیسک چین نے کہا کہ اس کے دو جنگی طیاروں کا امریکی نگران طیارے کا راستہ روکنا، قانونی، ضروری اور پیشہ وارانہ تھا۔امریکی نشریاتی ادارے کے مطابق چین کی وزارت دفاع نے اپنے بیان امریکا سے مطالبہ کیا کہ وہ غیر محفوظ ، غیر پیشہ وارانہ اور غیردوستانہ نگران پروازیں ختم کر دے۔ وزارت دفاع کی ویب سائٹ پر کہا گیا ہے کہ ان نگران پروازوں نے چین کی قومی سلامتی کے لیے خطرات پیدا کر دیئے ہیں۔ اس سے چین اور امریکا کے تعلقات اور سمندری اور فضائی تحفظ کو نقصان پہنچا ہے اور اس سے دونوں فریقوں کے پائلٹوں کی زندگیوں کے لیے خطرات پیدا ہو گے ہیں۔واضح رہے کہ 2001ئ میں ایک امریکی جاسوس طیارے کو جزیرہ ہنان میں جنگی طیاروں کی جانب سے راستہ روکے جانے اور پھر ایک طیارے سے ٹکرانے کے بعد اسے ہنگامی لینڈ نگ پر مجبور ہونا پڑا تھا۔ اس حادثے میں پائلٹ ہلاک ہو گیا تھا جب کہ چین نے عملے کے دیگر افراد کو حراست میں لیے جانے کے10 روز بعد امریکاکے حوالے کر دیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.