چوہدری برادران کی آمدن سے زائد اثاثوں کی تحقیقات 4 ہفتوں میں مکمل کرنے کا حکم

#Chaudhrybrothers #NAB #Complete #Investigation #Assets #Pakistan

لاہور:جدت ویب ڈیسک: ہائی کورٹ نے نیب کو 4 ہفتوں میں چوہدری برادران کی آمدن سے زائد اثاثوں کی تحقیقات مکمل کرنے کا حکم دے دیا۔
لاہور ہائی کورٹ میں چوہدری برادران کے خلاف نیب انکوائریوں اور چیئرمین نیب کے اختیارات کے خلاف درخواستوں پر سماعت ہوئی۔ ڈی جی نیب لاہور شہزاد سلیم لاہور ہائی کورٹ میں پیش ہوئے ۔چوہدری برادران کے وکیل نے عدالت عالیہ کے روبرو موقف اختیار کیا کہ ان کے موکل پر آمدن سے زائد اثاثوں اور غیر قانونی بھرتیوں کے الزامات ہیں، 2016 میں آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس کو نیب نے بند کر دیا تھا۔میں مکمل کر لیں گے ۔جسٹس صداقت علی خان نے ڈی جی نیب لاہور سے استفسار کیا کہ اگر ایک شخص ٹیکس دے رہا ہے اور اس کے تمام اثاثے ڈکلیئر ہیں پھر آپ اس کے خلاف تفتیش کیسے شروع کرتے ہیں، آپ کے اپنے کتنے اثاثے ہیں اور آپ جب لیفٹیننٹ تھے تب آپ کی تنخواہ کتنی تھی؟ڈی جی نیب لاہور شہزاد سلیم نے عدالت کو بتایا کہ نیب نے چوہدری برادران کے خلاف غیر قانونی بھرتیوں کا کیس بند کر دیا ہے ، چوہدری برادران کے خلاف نیب کے پاس زیر التوا ہے ۔