پاکستان نیوی ہر قیمت پر ملک کی بحری سرحدوں کی حفاظت کرتی رہے گی

جدت ویب ڈیسک :پاک بحریہ کی قیادت سنبھالنے کے بعد یہ نیول چیف کا ساحلی علاقوں کا پہلا دورہ ہے۔چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے آج تربت ، گوادر اور جناح نیول بیس اورماڑہ سمیت ساحلی علاقوں میں قائم پا ک بحریہ کی تنصیبات اور یونٹس کا دورہ کیا اور ان کی آپریشنل تیاریوں اور بندرگاہ کے حفاظتی اقدامات کا جائزہ لیا۔تربت میں قائم پاک بحریہ کے فضائی اسٹیشن آمد پر کمانڈر پاکستان فلیٹ رئیر ایڈمر ل محمد امجد خان نیازی نے نیول چیف کا خیر مقدم کیا۔ اس موقع پر سربراہ پاک بحریہ کو پی این ایس صدیق کی کارکردگی، آپریشنل تیاریوں، سیکیورٹی کی موجودہ صورتحال ، مقامی آبادی کی سماجی و معاشی بہبود کے لیے جاری ترقیاتی منصوبوں اور قومی تعمیر و ترقی کے لیے کیے جانے والے اقدامات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔چیف آف دی نیول اسٹاف نے پا ک بحریہ کی آپریشنل تیاریوں پر اطمینان کا اظہار کیا اور پی این ایس صدیق نیول ائیر بیس کو پاک بحریہ کی آپریشنل صلاحیتوں میں اضافے کی جانب ایک اہم سنگ میل قرار دیا۔نیول چیف نےکہا کہ یہاں کمرشل فضائی سرگرمیوں کے امکانات بھی روشن ہوں گے جس سے بلوچستان اور گردو نواح میں اقتصادی ترقی کو تیزی سے فروغ حاصل ہوگا۔ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے مزید کہا کہ دیگر شہری سہولتیں بشمول پی این ماڈل اسکول تربت مقامی آبادی کو معیاری سہولیات ان کے گھر کی دہلیز پر فراہم کریں گی جس سے اس خطے میں ترقی اور خوشحالی کے ایک نئے دور کا آغاز ہوگا جو پاکستان نیوی کی قومی تعمیر و ترقی کی پالیسی کے عین مطابق ہے۔بعد ازیں نیول چیف نے گوادر اور اورماڑہ میں قائم پاک بحریہ کے یونٹس کا دورہ کیا جہاں انہیں پاک بحریہ کے جاری اور مستقبل کے منصوبوں اور گوادر پورٹ کی آپریشنل سرگرمیوں اور کے تناظر میں سیکیورٹی کے پہلوؤں پر بریفنگ دی گئی۔ سیکیورٹی کی موجودہ صورتحال پر مجموعی تبصرہ کرتے ہوئے چیف آف دی نیو ل اسٹاف نے درپیش بحری چیلنجز کے تناظر میں پاکستان نیوی کی آپریشنل تیاریوں پر اطمینان کا اظہار کیا ۔چیف آف نیول اسٹاف نے تربت ، گوادر اور اورماڑہ میں تعینات افسروں اور جوانوں سے ملاقاتیں بھی کیں۔نیول چیف نے ملک کی بحر ی سرحدوں کے تحفظ کے لیے ان کے عزم اور لگن کو سراہا اور زور دیا کہ وہ اپنے کرادار اور شخصیت کو اسلام کے سنہری اصولوں اور تعلیمات کے مطابق استوا ر کریں ، اسلام کی تعلیمات کو اپنی زندگی میں لاگو کریں اور ساتھ ہی ساتھ پیشہ ورانہ مہارت کے حصول کے لیے سخت محنت کریں۔اہم نوعیت کے بحری ڈھانچے کے دفاع اورہر قسم کے خطرات سے پاکستان کے بحری مفادات کے تحفظ کو یقینی بنانے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان نیوی ہر قیمت پر ملک کی بحری سرحدوں کی حفاظت کرتی رہے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.