//

باپ بیٹا احتساب عدالت میں پیش۔شہباز شریف سے بیٹی کے سوا کوئی ملنے نہ آیا

لاہور: ویب ڈیسک :: شہباز شریف گرفتار ہیں جب کہ اس دوران ان سے بیٹی کے سوا ملاقات کیلیے کوئی نہیں آیا۔
شہباز شریف آمدن سے زائد اثاثہ جات اور منی لانڈرنگ کیس میں گرفتار ہیں اور نیب کی تحقیقاتی ٹیم کے زیر تفتیش جسمانی ریمانڈ کے 2ہفتے مکمل کرلیے مگر اس دوران ان سے ملاقات کیلیے کوئی نہیں آیا، صرف ان کی بیٹی جویریہ نے گزشتہ ہفتہ ایک بار اپنے والد سے ملاقات کی۔
ذرائع کے مطابق شہباز شریف نیب کے ہاتھوں گرفتار کیا ہوئے ان کے بے شمار چاہنے والے بھی ان کو بھول گئے، مریم نواز ، شہباز شریف کی اہلیہ تہمینہ درانی نے بھی تاحال ملاقات کیلیے کوئی رابطہ نہیں کیا۔
منی لانڈرنگ ریفرنس میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف اور حمزہ شہباز احتساب عدالت میں پیش ہوگئے۔ نیب حکام نے شہباز شریف کا مزید 15 روزہ جسمانی ریمانڈ مانگ لیا۔
احتساب عدالت میں شہباز شریف خاندان کیخلاف منی لانڈرنگ ریفرنس کی سماعت ہوئی۔ لیگی رہنما شہباز شریف نے کہا عدالت نے گزشتہ سماعت پر کھانے سے متعلق قابل ستائش حکم دیا، جج صاحب سب کو علم ہے مجھے کمر کی تکلیف ہے، کمر درد کے باعث گھر سے منگوائی کرسی نیب نے واپس لے لی، عمران خان اور شہزاد اکبر کے حکم پر نیب نے کرسی واپس لی، عام کرسی پر بیٹھ کر نماز پڑھتا اور کھانا کھاتا ہوں۔
شہباز شریف نے کہا کمر درد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، عدالت سے استدعا ہے کہ نیب والوں کو قانون کے مطابق حکم دیا جائے۔ جس پر فاضل جج نے کہا آپ درخواست لکھ کر دیں، تفصیلی حکم عدالت جاری کر دے گی۔